جمیل احمد
November 16, 2020

اپنی تعلیمی کارکردگی میں اضافہ کریں

ناکامی کے بعد ضروری ہے کہ اس کی ذمہ داری لی جائے اور کامیاب ہونے کے لیے نیا منصوبہ بنایا جائے۔ اس مرتبہ آپ نے اچھا گریڈ نہیں حاصل کیا ، آپ فیل ہو گئے ، یاآپ اپنا ہدف حاصل کرنے میں کامیاب نہیں ہو رہے ، تو ابھی بھی وقت ہے۔آپ اپنی عادات تبدیل کر کے ناکامی کو کامیابی میں بدل سکتے ہیں۔ اس مضمون میں ، ہم دیکھیں گے کہ کس طرح آپ اپنی تعلیمی کارکردگی کو بہتر بنا سکتے ہیں۔ یہاں یہ بتانا ضروری ہے کہ کچھ تجاویز ایک طالب علم کے لیے مفید ہوں گی لیکن شاید دوسرے کے لئے نہ ہوں۔ تاہم یہ ضرور ہے کہ ان تجاویز کا مختلف پس منظر اور عمر سے تعلق رکھنے والے بہت سارے طلبا ء کو فائدہ ہوا ہے:

1۔کلاس میں زیادہ توجہ دیں

اپنے خیالات میں گم رہنے سے گریز کریں اور اس پر توجہ دیں کہ کلاس میں کیا ہو رہا ہے ۔ بہت سے اساتذہ ان چیزوں کااشاروں ہی اشاروں میں اظہار کر دیتے ہیں جن کو وہ اپنے کوئز اور امتحانات میں شامل کرنا چاہتے ہیں۔ نیز ، آپ گھر جاکر پڑھائے گئے سبق کو سمجھنے کی جدوجہد کرنے کی بجائے کلاس ہی میں اس تصور کو سمجھ لیں گے۔

2۔سوالات پوچھیں

اس بات کا تعلق پڑھائے گئے سبق کے ساتھ ہے، کیونکہ آپ ایسی چیزوں کی نشاندہی کرنے کےقابل ہوں گے جن کو آپ کلاس میں نہیں سمجھ سکے تھے۔ اس طرح ، آپ اپنے اساتذہ سے اس کی مزید وضاحت حاصل کر سکیں گے۔ یہ بات ذہن میں رکھیں کہ سوالات پوچھنےکا مطلب یہ نہیں کہ آپ کمزور یا بے وقوف طالب علم ہیں۔

3۔نوٹس لیں

بہت سارے طلباء اپنے ہوم ورک ، کوئز ، یا امتحان میں نوٹس لینے کی مہارت نہ ہونے کی وجہ سے ناکام ہو جاتے ہیں۔ نوٹس لینے کی مہارت آپ کے ہر کام اور ہر کلاس کے لیے مفید ہے۔ البتہ یہ یقینی بنائیں کہ آپ کے نوٹس پڑھنے کے قابل ، کارآمد اور منظم ہیں۔

4۔دہرائی اور مشق کریں

غیر تسلی بخش کارکردگی کی ایک بنیادی وجہ دہرائی اور مشق نہ کرنا ہے۔ اپنے نوٹس کا ضرور جائزہ لیں اور متعلقہ کتابیں پڑھیں۔ نیز ، امتحانات کو مد نظر رکھ کر مشق کرنے کا یہ فائدہ ہو گا کہ آپ اپنی کمزوریوں کی نشاندہی کرسکیں گےاور انھیں دور کرنے کے لیے کام کرسکیں گے۔ اس کے علاوہ ، دہرائی کے لئے مناسب وقت رکھیں تاکہ وقت کی کمی کےباعث آپ پر زیادہ دباؤ نہ آئے۔

5۔سستی و کاہلی ترک کر دیں

بہت سارے طلباء مقررہ تاریخ سے ایک رات پہلےاپنا مضمون لکھتے ہیں ، امتحان کی رات پیپرز کی تیاری کرتے ہیں ، یا کلاس شروع ہونے سے کچھ پہلے ہوم ورک ختم کرنے کی کوشش کرتے ہیں۔ اگر آپ ایسا کر رہے ہیں تو فوراً اس عادت کو ترک کر دیں! کام کے بھاری بوجھ سے بچنے کے لیےآپ کو روزانہ کی بنیاد پر اپنا کام کرنے کی ضرورت ہے۔ اپنا کام شروع کرنے کے لئے آخری وقت کا انتظار نہ کریں۔

6۔کام کو منظم کرنا شروع کریں

اپنے کام کو منظم کرنا آپ کی زندگی اور خاص طور پر آپ کی تعلیمیکارکردگی کو بہتر بنانے کا بہترین طریقہ ہے۔ ہر مضمون کے لئے الگ فولڈر یا بائنڈر بنائیں اور اس مضمون سے متعلق تمام کاغذات اس میں ڈالیں۔ اپنے بیگ کو صاف رکھنا ضروری ہے۔ہفتے میں ایک دن ایسارکھیں جس میں آپ اپنے فولڈرز کھولیں اور غیر ضروری کاغذات کو ضائع کردیں۔ نیز ، ہوم ورک کی آخری تاریخ ، امتحانات کی تاریخوں اور دیگر اہم چیزوں کے بارے میں بھی اپنے کیلنڈر یا ڈائری کو استعمال کرنا شروع کریں۔

7۔سیکھنے کے بارے میں مثبت رویہ رکھیں

یقیناً امتحانات میں بری کارکردگی سےآپ کے اندرمنفی جذبات پیدا ہوں گے اورنتیجے کے طور پر آپ پر مایوسی طاری ہو گی۔ آپ خود کوافسردہ یا دباؤ میں محسوس کریں گے، تاہم اس کیفیت کو مثبت جذبات کی مدد سے شکست دینا ضروری ہے۔ آپ کو جو بھی چیلنج درپیش ہے اس کا سامنا کرنے کے لئے مثبت رویہ اختیار کرنا مفید ہے کیونکہ یہی واحد راستہ ہے جس سے آپ اپنی حالت تبدیل کر سکیں گے۔ آپ کو ہمیشہ یہ کہتے رہنا ہوگا کہ "میںیہ کام کر سکتا ہوں" ، "میں کروں گا" ، "میں ہار نہیں مانوں گا" ، "میں ناکام شخص نہیں ہوں۔"

8۔سیکھنےکے عمل کوپر لطف بنائیں

والدین عام طور پر تفریح کو ناکامی کے ساتھ جوڑتے ہیں تاہم وہ ایک اہم نکتہ نظر انداز کر جاتے ہیں کہ سیکھنے کے عمل کو پر لطف بنایا جا سکتا ہے۔ اگر آپ اپنے سیکھنے کے عمل سے لطف اندوز ہونے کے طریقے تلاش کرلیں تو تعلیم اور سیکھنےکے بارے میں آپ کا رویہبدل جائے گا۔ مثال کے طور پر، اگر آپ کو کھیل پسند ہیں تو اپنے مطالعے کے شیڈول میں کھیل کے لیے بھی تھوڑا وقت رکھ لیں۔ نیز ، اپنی کامیابیوں پر کسی نہ کسی انداز میں خوشی منائیں۔ یاد رکھیں، کامیابی حاصل کرنے کے لیے اس کا شوق اور اس کے لیے تحریک ضروری ہے۔

9۔مختصر وقفے لیں

مطالعہ بعض اوقات ایک بوجھل کام بن جاتا ہے اور کبھی کبھی چیزوں کوسمجھنا ناممکن سا لگنے لگتا ہے۔ لہٰذا کوشش کریں کہ آپ کے مطالعے کے سیشن45 منٹ سے زیادہ کے نہ ہوں۔ ہر سیشن کے بعد 10 سے 15 منٹ کا ایک مختصر وقفہ لیں اور کوئی مختلف سا کام کریں جیسے ایک مختصر واک کرنا ، ایکتعمیری ویڈیو کلپ دیکھ لینا، یا ایک مختصر سی ورزش کر لینا۔

10۔ بری عادات سے چھٹکارا حاصل کریں

بری عادتوں میں مبتلا ہونا جتنا آسان ہے اتنا ہی چھٹکارا پانا مشکل ہے۔ اچھی عادات کا معاملہ اس کے بالکل برعکس ہوتا ہے۔ ذرا سوچیں، آپ نے کتنی بار ورزش کرنے ، بہتر کھاناکھانے ، اور مناسب نیند لینے کی عادت پیدا کرنے کی کوشش کی ہے؟ بری عادات نہ صرف آپ کی صحت کو نقصان پہنچاتی ہیں ، بلکہ مطالعہ کا قیمتی وقت اور توانائی بھی چھین لیتی ہیں۔ لہٰذا ، ان عادات کی ایک فہرست بنائیں جو آپ کا وقت ضائع کرتی ہیں یا آپ کی صحت کو نقصان پہنچا رہی ہیں، اور ایک منظم طریقے سے ان عادات سے چھٹکارا حاصل کرنے کی کوشش کریں۔